پیر، 22-اپریل،2024
( 12 شوال 1445 )
پیر، 22-اپریل،2024

EN

گلگت بلتستان میں شدید برف باری سے زمینی رابطہ منقطع، ہائی الرٹ جاری

02 مارچ, 2024 15:35

گلگت بلتستان میں شدید بارش اور برف کا سلسلہ جاری ہے جس کے باعث اہم شاہراہیں بند ہو گئیں۔

شدید برف باری کی وجہ سے کئی علاقوں کا دوسرے علاقوں سے زمینی راستہ بھی منقطع ہو گیا جب کہ عوام گھروں میں بند ہو کر رہ گئے ہیں۔

گلگت بلتستان میں ہفتہ کے روز بھی تیز بارش اور بالائی علاقوں میں شدید برف باری کا سلسلہ جاری رہا جس کے باعث لینڈ سلائیڈنگ اور برف کے تودے گرنے سے شاہراہ قراقرم 3 مقامات پر سے اور شاہراہ سکردو بھی بند ہو گئی۔

گلگت شہر اور دیگر تمام اضلاع بشمول ضلع ہنزہ، استور، ضلع غذر اور بلتستان میں تیز بارش اور برفباری کا سلسلہ جاری ہے۔

پہاڑوں اور بالائی علاقوں میں شدید برف باری کے باعث شہری علاقوں کی جانب زمینی راستے آمدورفت کے لیے بند ہوچکے ہیں۔

شدید برف باری اور بارش کی وجہ سے معمولات زندگی متاثر اور لوگ گھروں میں بند ہو کر رہ گئے ہیں جب کہ شہری علاقوں میں بارش اور برف باری سے لطف اٹھانے کے لیے لوگ گھروں سے باہر نکلے  ہیں۔

شدید بارشوں اور برف باری کے اس نئے سلسلہ کے باعث گلگت بلتستان میں سردی کا راج پھر لوٹ آیا، عوام کی معمولات زندگی متاثر ہو کر رہ  گئی۔

شاہراہ قراقرم مختلف مقامات سے بند ہو گئی ہے جس کے باعث گلگت بلتستان کی طرف سفر کرنا دشوار ہو گیا ہے،  اس تناظر میں صوبائی حکومت نے مسافروں کو محفوظ مقامات پر پہنچانے کے لیے احکامات جاری کر دیے۔

ضلعی انتظامیہ نے بارش اور برفباری کے دوران غیر ضروری سفر سے اجتناب کی ہدایات دی ہیں۔

دوسری جانب محکمہ موسمیات نے بارش کا نیا سلسلہ 3 مارچ تک جاری رہنے کا امکان ظاہر کیا ہے۔گلگت بلتستان ڈیزآسٹر منیجمنٹ اتھارٹی نے الرٹ جاری کرتے ہوئے تمام متعلقہ اداروں کو ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے تیار رہنے کی ہدایت دی ہے۔

Leave a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Scroll to Top